گگی

Education posted on 1/17/2021 6:22:19 PM by Sana , Likes: , Comments: 0, Views: 691

گگی
بہت دیر ہو رہی ہے میری بیٹی کو, روز لیٹ ہو جاتی ہو, ٹیچر فاطمہ بہت غصے والی ہے, بہت غصہ کرتی ہے چلو, چلو جلدی کرو میری جان اٹھو "۔ ترنم نے اپنی بیٹی کے اوپر سے چادر ہٹائی, اسے گود میں لیا, اس کے بال سہلائے, منہ چوما, چلو۔

 گگی 

 

از قلم ✍ شیبامرزاحنیف

"میری گگی اٹھ جاؤ نا۔سکول نہیں جانا کیا؟

بہت دیر ہو رہی ہے میری بیٹی کو,  روز لیٹ ہو جاتی ہو, ٹیچر فاطمہ بہت غصے والی ہے,  بہت غصہ کرتی ہے چلو,  چلو جلدی کرو میری جان اٹھو "۔ ترنم نے اپنی بیٹی کے اوپر سے چادر ہٹائی,  اسے گود میں لیا, اس کے بال سہلائے,  منہ چوما, چلو۔" واش   روم جاؤ, منہ ہاتھ دھو,وہ دیکھو ماما نے  تمہارا یونیفارم استری کر کہ رکھا ہے,  اچھا میری پری یہ تو بتاؤ,  آج لنچ کیا لے کے جانا ہے؟ میرے بیٹے نے کیا کھانا ہے؟ ماما کیا بنا کے دے اپنے بیٹے کو ؟ "ترنم نے پیار سے پچکارا۔ "انڈا پراٹھا بنا دوں کیا؟ یا سینڈوچ,  میرے بچے نے کیا کھانا ہے ؟ چائے بسکٹ فیورٹ ناشتہ بیٹی کے سامنے رکھا,  مگر گگی منہ بسورے بیٹھی تھی,  ماں دیکھ مسکرانے لگی,  سبھی بچے سکول جانے کے نام سے ایسے ہی چڑ جاتے ہیں,  ماں نے گگی کو شوز پہنائے,"  اچھا گگی آج ماما آپ کو بیس روپے دے گی,  اس نے سر ہلا کہ گگی کو خوش کرنے کی کوشش کی, نان ٹکی لے لینا,  گگی کے بیگ میں لنچ ڈالا,  اور بیس روپے تھمائے کہ کسی طرح بچی خوش ہو جائے,  اس کا ہاتھ پکڑا,  اور سکول کی طرف روانہ ہوئی  , وہ دونوں ماں,  بیٹی پیدل ہی سکول جا رہیں تھیں,  جبکہ دوسرے بچوں کے باپ اپنے بچوں کو موٹر سائیکلوں,  سائیکلوں,  گاڑیوں پہ لیے جا رہے تھے   , اس نے ایک نظر بچوں کے باپ پہ ڈالی,  دوسری نظر ہنستے مسکراتے لاڈ اٹھواتے بچوں پہ, اور ایک ڈری سہمی نظر اپنی گگی پر,  اس کے چہرے پہ چھائی گہری اداسی,  اس کے افسردہ دل کی ترجمانی کرنے لگی,

ارے  میری پیاری گگی  !تم رونے لگی! رو نہیں! تم رو نہیں تمہارے پاپا بھی آئے گے تمہیں بھی موٹر سائیکل پہ سکول چھوڑا کریں گے,  تم رو مت گگی, پاپا آئے گے,  ضرور آئے گے! وہ بیچ راہ ہی بیٹی کو سینے سےلگائے تسلی دیے جا رہی تھی,  اور زاروقطار رونے لگی,  

"مت رو ترنم,  صبر کرو, روتے نہیں,"  پڑوسن رشیدہ باجی بھی اپنے بچے سکول چھوڑنے آئی تھی,  اب رستے پہ روتی ترنم کو تسلی دینے لگی,  

میں کب رو رہی ہوں؟ یہ بچی رو رہی ہے,  کہتی پاپا کے پاس جانا ہے, موٹر سائیکل پہ پاپا کے ساتھ بیٹھ کے سکول جاؤں گی,  میں کب رو رہی ہوں؟ میں تو اس سے کہہ رہی ہوں آج ماما کے ساتھ چلی جائے,  کل پاپا چھوڑ آئے گے,  مگر سنتی ہی نہیں ہے میری, بہت ضدی ہوگئی ہے,  ترنم نے منہ بنا کے  گگی کی شکایت کی تو آپا رشیدہ گگی کے بالوں پہ پیار سے ہاتھ پھیرنے لگی 

گگی تو بہت پیاری ہے,  اچھی ہے,  سب کی بات سنتی ہے,  آج گگی خالہ کے ساتھ خالہ کے گھر جائے گی,  مزے مزے کے کھانے کھائے گی   , بولو منظور,  خالہ نے گگی کے سامنے شرط رکھی تو گگی خوش ہو گئی اور سکول جانے کی بجائے خالہ رشیدہ کے گھر جانے لگی,  اس نے ترنم کو ساتھ میں لیا, گگی کو گود میں اٹھایا, اور رشیدہ کی گھر کی راہ لیتے ہوئے سبزی فروش ماجد کے الفاظ سنائی دینے لگے,  

" بھائی بشیرے کی گھر والی ہے, وہی جو بیٹی کے ساتھ ایکسیڈنٹ میں مارا گیا, بچاری بشیرے کی گھر والی ذہنی توازن کھو بیٹھی گڑیا لیے پھرتی ہے "۔۔۔۔

 


Like: