ڈر اور زمہ داری میں فرق

Education posted on 4/21/2021 10:08:35 PM by Saba Akhter , Likes: , Comments: 0, Views: 694

ڈر اور زمہ داری میں فرق
ڈر کے خوف سے کوئ باقاعدگی سے کام نہیں کرتا ایک دن کرے گاکل نہیں اس لیے زمہ داری کا احساس پیدا کریں

🌸ڈراور زمہ داری میں فرق🌸

ازقلم🖊️:صبااختر🌸

اسلام علیکم ❤️

جدید دور میں جہاں دیکھو ڈر کے آثار نظر آتے ہیں احساس زمہ داری کو فروغ دینے کی بجائے ڈر کو سراہا جا رہا ۔

والدین اپنے بچوں کو اگر کسی کام کی تلقین کرتے ہیں تو ان کا مقصد ہی بچوں میں ڈر پیدا کرنا ہوتا ہے نہ کہ زمہ داری ۔۔

بچپن سے ہی بچے کے دماغ میں یہ ڈر پیدا کر دیا جاتا ہے جب ماں اپنے بچے سے کہتی ہے بیٹا کام نہ کیا تو مار پڑے گی سزا دی جائے گی فلاں فلاں بجائے اس کے کہ بچے کو اچھائ اور برائ سے آگاہ کیا جائے اور اس کے سامنے سارے حقائق بیان کیے جائیں پھر فیصلہ بچے کے زہن پہ چھوڑا جائے تاکہ اس میں بھی تو خود سے سوچنے کی صلاحیت پیداہو ۔ اگر آپ اپنے بچے کے من میں صرف اور صرف اچھے اور برے کا فرق واضح کر سکیں تو یہ بات یقینی ہے وہ خود سے سوچے گا ۔ اور میرا ماننا ہے کہ جب ایک انسان کے اندر یہ احساس پیدا ہو جائے کہ یہ برائ ہے اور یہ اچھائ ہے تو یہی وہ مقام ہوتا ہے کہ وہ پھر کبھی برائ کی طرف جانے کا سوچے گا تک نہیں کرنا تو دور کی بات ۔ بچے میں احساس زمہ داری پیدا کریں جس سے اس کو یہ احساس ہو کہ یہ کام میرا ہے میں نے کرنا ہے اس کے لیے کوئ اور جواب دہ نہیں ہوگا تو وہ کام دل سے کرے گا اور اسے بار بار یاد دہانی کروانے کی ضررت بھی نہیں پڑے گی ☺️

جب اسے یہ بتایا جائے گا کہ تمہارا اس دنیا میں آنے کا مقصد کیا ہے ۔ اللہ کی پاک زات آپ سے کیا توقعات رکھتی ہے تو وہ برائ کی طرف ہرگز نہیں جائے گا لیکن اگر آپ اسے ڈرا کر دھمکاکر کام کروائیں تو یہ بات تہہ ہے کہ وہ ڈر سے آج تو کام کرے گا لیکن کل نہیں 

If you want to bring permanent changes in your childs then you will have to create the sense of responsibility in them 🌸

🌸🌸🌸🌸🌸🌸🌸🌸


Like: